24

کورونا وائرس کے بعد نورو وائرس کا خطرہ ماہرین نے پیشگوئی کر کے دنیا کو خبردار کردیا

کورونا وائرس کے بعد نورو وائرس کا خطرہ، ماہرین نے پیشگوئی کر کے دنیا کو …

لندن(مانیٹرنگ ڈیسک) کورونا وائرس کی سختیاں کچھ کم ہورہی تھیں اور زندگی معمول کی طرف آتی کچھ دکھائی دینے لگی تھی کہ اب ماہرین نے ایک اور موذی وائرس کے حملے کی پریشان کن پیشگوئی کر ڈالی ہے۔ میل آن لائن کے مطابق پبلک ہیلتھ انگلینڈ کے ماہرین نے بتایا ہے کہ کورونا وائرس سے متعلق پابندیوں میں نرمی آنے پر نورووائرس (Norovirus)پھیلنے کا خطرہ تین گنا زیادہ ہو گیا ہے۔ یہ وائرس سردیوں میں لوگوں کو اپنی لپیٹ میں لے سکتا ہے۔

رپورٹ کے مطابق نورووائرس ایسا وائرس ہے جو انتہائی سرعت سے پھیلنے کی صلاحیت رکھتا ہے اور لوگوں میں قے اور ڈائریا کا سبب بنتا ہے۔ ماہرین کا کہنا ہے کہ اس وقت بھی یہ وائرس تیزی سے پھیل رہا ہے اوراس کے مریضوں کی تعداد گزشتہ 5سالہ کی ریکارڈ سطح کو چھو چکی ہے۔ 5جولائی کو ختم ہونے والے ہفتے میں برطانیہ میں اس وائرس کے 54مریض سامنے آئے، جو پانچ سال کے دوران کسی ایک ہفتے میں سامنے آنے والی سب سے زیادہ تعداد ہے۔ 

این ایچ ایس کے پروفیسر ڈاکٹر سحیر گیربیا کا کہنا تھا کہ کورونا وائرس کی وجہ سے لاگو کی گئی پابندیوں کے سبب نورووائرس کے کیسز کی تعداد میں بھی نمایاں کمی آئی تھی تاہم اب یہ پابندیاں اٹھنے پر یہ وائرس پہلے کی نسبت زیادہ تیزی سے پھیل رہا ہے اور اس کے ریکارڈ مریض سامنے آ رہے ہیں۔خدشہ ہے کہ رواں سال موسم سرما میں یہ وائرس ممکنہ طور پر سنگین صورت اختیار کر سکتا ہے۔

مزید :

تعلیم و صحت

اس خبر پر اپنی رائے کا اظہار کریں

اپنا تبصرہ بھیجیں

This site uses Akismet to reduce spam. Learn how your comment data is processed.