48

یمن کو ثالثی کی باضابطہ پیشکش

یمن کو ثالثی کی باضابطہ پیشکش، فریقین کو مذاکرات کی دعوت، پاکستان سیاسی حل کیلئے کردار ادا کرے گا، وزیراعظم، ہم تنازع کا حصہ نہیں بنیں گے، وزیرخارجہ
اسلام آباد (اے پی پی)پاکستان نے یمن کو ثالثی کی باضابطہ پیشکش کرتے ہوئے فریقین کو مذاکرات کی دعوت دی ہے۔وزیراعظم عمران خان سے یمن کے سفیر محمد مطاہر الشعبی نے گزشتہ روز وزیراعظم ہائوس میں ملاقات کی۔ یمنی سفیر نے وزیراعظم کو یمن کی تازہ ترین صورتحال سے آگاہ کیا۔
ملاقات کے دوران وزیراعظم عمران خان نے اقوام متحدہ سلامتی کونسل کی قرارداد کی روشنی میں یمنی تنازعہ کے جلد حل کیلئے پاکستان کی غیر متزلزل حمایت کی یقین دہانی کراتے ہوئے کہا کہ یمن میں تنازعہ سے علاقائی امن و استحکام متاثر ہو رہا ہے اور اس کا کوئی فوجی حل نہیں، پاکستان سیاسی حل کیلئے کردار ادا کرےگا۔ وزیراعظم نے کہا کہ پاکستان صدر عبدالرب منصور ہادی کی جائز حکومت کی بحالی کیلئے حمایت جاری رکھے گا ۔ وزیراعظم نے یمن میں قحط سے متاثر ہونے والے افراد کیلئے انسانی ہمدردی معاونت کیلئے تمام ذرائع بروئے کار لانے پر زور دیا۔ وزیراعظم نے یمنی عوام کی مشکلات دور کرنے اور ان کی اپنے گھروں کو بحفاظت یقینی بنانے کیلئے عالمی سطح پر زیادہ مربوط کوششوں پر زور دیا۔ بعد ازاں یمن کے سفیرمحمدمطہر الشعبی نے صدر مملکت ڈاکٹر عارف علوی سے ایوان صدر میں ملاقات کی۔ ملاقات میں صدر مملکت عارف علوی نے یمن میں بحران کے سیاسی حل کیلئے مذاکرات کا جلد آغاز کی امید ظاہرکرتے ہوئے کہاہے کہ صرف مذاکرات سے ہی اس مسئلے کا حل نکالاجاسکتا ہے۔ صدرمملکت نے یمن کے اتحاد، خودمختاری، سیاسی آزادی اورعلاقائی سالمیت اور صدر عبدالرب منصورہادی کی جائز اورقانونی حکومت کی بحالی کے ضمن میں پاکستان کے اصولی موقف کا اعادہ کیا۔ صدر مملکت نے یمن تنازعہ کے تمام فریقوں کو بحران کے حل کیلئے اقوام متحدہ کی سلامتی کونسل اوراسلامی تعاون تنظیم (اوآئی سی) کی قراردادوں کی مکمل پاسداری کی ضرورت پرزوردیا۔

اس خبر پر اپنی رائے کا اظہار کریں

اپنا تبصرہ بھیجیں

This site uses Akismet to reduce spam. Learn how your comment data is processed.