80

یاہو میسنجر کی موت واقع ہو گئی

دنیا کی اولین میسیجنگ سروسز میں سے ایک’یاہو میسینجر‘کا آج خاتمہ ہوگیا ۔ غیر ملکی میڈیا کے مطابق آن لائن ٹیکنالوجی کمپنی ’یاہو ‘نے اپنی 20 سال پرانی میسجنگ سروس اپلیکیشن’ یاہو میسنجر‘ کو بند کردیا ہے۔

یاہو میسینجر پہلی بار1998 میں متعارف کرایا گیاتھا اور فوراً ہی مقبول بھی ہو گیا تھا مگر فیس بک، واٹس ایپ، میسینجر، اسنیپ چیٹ، وی چیٹ جیسی دیگر میسجنگ اپلیکیشن اور سوشل ویب سائٹس نے اسے بلکل پیچھے چھوڑ دیا۔

صارفین کی توجہ حاصل کرنے کے لیے اس اپلیکیشن میں متعدد بار تبدیلیاں بھی لائی گئیں مگر نتیجہ نہ ملنے پر اسے مستقل طور پر 17 جولائی 2018 کو بند کرنے کا اعلان کر دیا گیا۔

کمپنی کے مطابق یاہو میسینجر کے وہ تمام پیغامات جو یاہو کےصارفین کے میل باکس میں محفوظ تھے، انہیں بھی جلد ہی ختم کر دیا جائے گا لہذا صارفین سے درخواست کی گئی ہے ان پیغامات کو اپنے پاس ڈاؤن لوڈ کر لیں۔

واضح رہے کہ یاہو کمپنی اپنی نئی میسجنگ اپلیکیشن اسکئرل کے نام سے متعارف کرارہی ہے جسے 17 جولائی کے بعد آن لائن کیا جائے گا۔

اس خبر پر اپنی رائے کا اظہار کریں

اپنا تبصرہ بھیجیں

This site uses Akismet to reduce spam. Learn how your comment data is processed.