23

پشتو گلوکارہ ریشم مبینہ طور پر خاوند کے ہاتھوں قتل

پولیس کے مطابق خیبر پختونخوا کے ضلع نوشہرہ میں مشہور پشتو گلوکارہ ریشم کو مبینہ طور پر ان کے شوہر نے اپنے ہی گھر میں قتل کر دیا ہے۔

نوشہرہ کے ضلعی پولیس افسر زاہد اللہ نے بی بی سی کے نامہ نگار اظہار اللہ کو بتایا کہ مقتولہ ریشم فائدہ خان کی چوتھی بیوی تھیں۔

زاہد اللہ کے مطابق قتل کی ایف ائی آر مقتولہ کی ہمشیرہ کی مدعیت میں درج کی گئی ہے جس میں مقتولہ کے شوہر کے علاوہ ایک ڈاکٹر ہمایوں کو بھی بطور ملزم نامزد کیا گیا ہے۔

پولیس افسر کے مطابق دوسرے ملزم ڈاکٹر ہمایوں کی مقتولہ کی بہن کے ساتھ شادی ہوئی تھی جو کچھ عرصہ بعد طلاق پر ختم ہو گئی۔

ایف ائی آر میں لکھا گیا ہے کہ ریشم کے شوہر فائدہ خان بیرون ملک مزدوری کرتے ہیں اور چھٹیوں پر گھر آئے ہوئے تھے۔

ایف ائی آر میں ریشم کی ہمشیرہ نے لکھوایا ہے کہ مقتولہ کے شوہر فائدہ خان کے بیرون ملک ہونے کی وجہ سے وہ ریشم کے گھر میں رکھوالی کے لیے رہتی تھیں۔

انھوں نے مزید بتایا کہ شوہر اور ریشم کے مابین گذشتہ ایک ہفتے سے ناچاقی چل رہی تھی۔

پولیس افسر زاہد اللہ نے بتایا کہ ملزمان کی گرفتاری کے لیے کوششیں جاری ہیں۔

خیبر پختونخوا میں ماضی میں بھی پشتو گلوکاراؤں کے قتل کے واقعات پیش آئے ہیں۔

پشاور میں پشتو کی معروف گلوکارہ غزالہ جاوید کو بھی شوہر نے چند سال پہلے قتل کر دیا تھا جبکہ ایک اور معروف گلوکارہ ایمن اداس کی قتل کا مقدمہ ان کے بھائی پر درج ہوا تھا۔

اس خبر پر اپنی رائے کا اظہار کریں

اپنا تبصرہ بھیجیں

This site uses Akismet to reduce spam. Learn how your comment data is processed.