33

نوازشریف کی ایک اور ناکامی ۔ پارٹی صدارت کے لیے بھی نااہل قرار

سپریم کورٹ نے نوازشریف کو پارٹی صدارت کے لئے نااہل قرار دیدیا اور ن لیگ کے سینیٹ امیدواروں کے ٹکٹ بھی منسوخ کردیے۔

چیف جسٹس میاں ثاقب نثار کی سربراہی میں 3رکنی بنچ نے الیکشن ایکٹ 2017ء کیس کا مختصر فیصلہ سنادیا۔

چیف جسٹس نے بنچ کا مختصر فیصلہ پڑھ کر سنایا،جس میں کہا گیا کہ طاقت کا سرچشمہ اللہ تعالی ہے ، آئین کا آرٹیکل 17 سیاسی جماعت بنانے کا حق دیتا ہے ،آرٹیکل میں قانونی شرائط بھی موجود ہیں۔

بطور وزیراعظم نااہل ہونے والے نوازشریف اپنی سیاسی جماعت کی صدارت کے لئے نااہل ہوگئے۔

سپریم کورٹ بنچ کے مختصر فیصلے میں کہا گیا کہ 62 ،63 پر پورا نہ اترنے والا شخص پارٹی صدارت نہیں رکھ سکتا۔

فیصلے میں نواز شریف کے بطور پارٹی صدر سینیٹ امیدواروں کی نامزدگی کو غیر قانونی قرار دیتے ہوئے منسوخ کردیا۔

عدالتی فیصلے میں نوازشریف کے بطور پارٹی صدر اٹھائے گئے اقدامات کو بھی کالعدم قرار دیا گیا ہے ۔

فیصلے پر میڈیا سے گفتگو میں ایڈووکیٹ فیصل چوہدری نے کہا کہ سپریم کورٹ کے حکم کی رو سے ن لیگ سینیٹ الیکشن سے آئوٹ ہوگئی ہے ۔

ان کا یہ بھی کہناتھاکہ ہوسکتا ہے سینیٹ انتخابات کا شیڈول بدل دیا جائے ،اگر شیڈول نہیں بدلا گیا تو ن لیگ اس میں حصہ نہیں لے سکے گی ۔

ایڈووکیٹ اکرم چوہدری نے کہا کہ سپریم کورٹ کے فیصلے میں سینیٹ انتخابات کا کوئی ذکر نہیں

اس خبر پر اپنی رائے کا اظہار کریں

اپنا تبصرہ بھیجیں

This site uses Akismet to reduce spam. Learn how your comment data is processed.