40

خیبرپختونخوا، خواتین ٹیچرز کیلئے ٹرانسفر پالیسی میں نرمی

پشاور : خیبرپختونخوا حکومت نے گرلز سکولوں کی ٹیچرز کو درپیش مختلف وجوہات پر ان کیلئے ٹرانسفر پالیسی میں نرمی کا فیصلہ کرلیاہے جس کی روشنی میں تبادلوںسے متعلق درخواستوں پر چھان بین کیلئے ضلعی سطح کی کمیٹیاں تشکیل دینے کی منصوبہ بندی کر لی گئی ہے ذرائع کے مطابق خیبر پختونخوا کی سرکاری سکولوں میں تعینات بعض خواتین ٹیچرز نے ڈیوٹی کسی اور مقام پر لگانے کی درخواستیں دے رکھی ہیں جن کی روشنی میں گزشتہ روز ایجوکیشن ڈائریکٹوریٹ میں ای ڈی اوز کا ایک اجلاس ہوا ہے جس میں پشاورسمیت صوبہ بھر کے تمام ڈی ای اوز نے مختلف تجاویز پر غور کے بعد این ٹی ایس یعنی نیشنل ٹیسٹنگ سروس کے ذریعے بھرتی ٹیچرز کے باہمی تبادلے، دشمنی کی صورت میں اورخواتین اور شادی کی وجہ سے تبادلوں کیلئے خصوصی پالیسی کے تحت خواتین ٹیچرز کو ٹرانسفر کی اجازت دینے کی منظوری دی گئی تاہم اس قسم کے تبادلوں کیلئے ایس ٹی آر پالیسی یعنی سٹوڈنٹس ٹیچرز ریش کو پیش نظررکھا جائے گا محکمہ ابتدائی وثانوی واعلیٰ ثانوی تعلیم کے ذرائع کے مطابق مذکورہ فیصلے کی روشنی میں مذکورہ تین وجوہات پر مشتمل تبادلوں سے متعلق درخواستوں کی جانچ پڑتال کا بھی فیصلہ کیا گیا ہے اس حوالے سے محکمہ تعلیم نے صوبہ بھر میں ضلعی سطح پر خصوصی کمیٹیاں تشکیل دینے کی ہدایت بھی جاری کردی ہے جہاں سے سفارشات پر تبادلوں کی منظوری یا مسترد کرنے کا فیصلہ کیا جائیگا۔

اس خبر پر اپنی رائے کا اظہار کریں

اپنا تبصرہ بھیجیں

This site uses Akismet to reduce spam. Learn how your comment data is processed.