30

بڑے بڑے برج الٹ گئے

عام انتخابات 2018میں بڑے بڑے برج الٹ گئے، الیکشن 2018میں خیبرپختونخوا میں سونامی کے سامنے بڑے بڑے برج الٹ گئے، بلاول بھٹو، شہباز شریف، امیر مقام، سینیٹر سراج الحق جیسے بڑے نام پی ٹی آئی امیدواروں کا جم کر مقابلہ نہ کرسکے۔
تفصیلات کے مطابق کے پی کے میں ہونے والے الیکشن میں بہت سارے اپ سیٹ سامنے ہیں۔ اس حوالے سے این اے دو سوات سے امیرمقام پی ٹی آئی امیدوار ڈاکٹرحیدر سے ہار گئے۔ این اے تین سوات سے شہبازشریف کو پی ٹی آئی کے سلیم الرحمان نے شکست دی، جبکہ این اے14سے کیپٹن(ر) صفدر کے بھائی کو پی ٹی آئی کے زرگل نے ہرا دیا۔ اس کے علاوہ این اے38ڈی آئی خان ون سے علی امین گنڈا پور کو فضل الرحمان پر برتری حاصل ہے، این اے35بنوں سے عمران خان نے اکرم خان درانی کو ہرا دیا، این اے8مالاکنڈ سے چیئرمین پی پی بلاول بھٹو پی ٹی آئی امیداوار جنید اکبر سے ہار گئے۔
این اے24چارسدہ دو سےاسفند یار کو پی ٹی آئی کے فضل محمد سے شکست کا سامنا کرنا پڑا، این اے23چارسدہ ون سے آفتاب شیرپاؤ کو پی ٹی آئی کے انورتاج سے شکست کھانا پڑی، این اے سات لوئر دیر2سے سراج الحق کو پی ٹی آئی کے محمد بشیر نے ہرا دیا۔غیر حتمی اور غیر سرکاری نتائج کے مطابق این اے53اور 57سےسابق وزیراعظم شاہدخاقان عباسی ،این اے 8مالاکنڈسے بلاول بھٹو،این اے 38اوراین اے 39سےمولانافضل الرحمن،این اے 24ٹوسےاسفندیارولی خان،این اے31سے غلام بلور اوراین اے 7لوئردیر2 سے سراج الحق ہار گئے ، رات گئے موصولہ نتائج کے مطابق راناثناءاللہ، سعد رفیق ،طلال چوہدری، یاسمین راشد، سمیرا ملک ،کراچی سے شہباز شریف ،محمدمیا ں سومرو،ارباب غلام رحیم ہا رہے تھے جبکہ چوہدری نثار علی خان کو ایک صوبائی حلقے میں برتری تھی جبکہ دو قومی اور ایک صوبائی حلقے میں وہ دوسرے نمبر پر تھے ۔دریں اثناء پشاور سےنمائندہ جنگ کے مطابق خیبر پختونخوا کے غیر سرکاری اور غیر حتمی نتائج آنے کے بعد بڑے بڑے برج الٹ گئے ہیں، پیپلز پارٹی کے چیئرمین بلاول بھٹو زرداری ،مسلم لیگ ن کے صدر میاں شہباز شریف، عوامی نیشنل پارٹی کے صدر اسفندیارولی خان، جمعیت علمائے اسلام کے قائد مولانا فضل الرحمان، جماعت اسلامی کے امیر سراج الحق، قومی وطن پارٹی کے چیئرمین آفتاب احمد خان شیرپاؤ بھی الیکشن ہار گئے ہیں،حاجی غلام احمد بلور، میاں افتخار حسین، مولانا گل نصیب خان اور سکندر شیرپاؤ بھی شکست سے دو چار ہوگئے ہیں۔پاکستان پیپلز پارٹی کے چیئرمین بلاول بھٹو زرداری قومی اسمبلی کے حلقہ این اے8ملاکنڈ سے تحریک انصاف کے امیدوار جنید اکبر، پاکستان مسلم لیگ ن کے صدر میاں محمد شہباز شریف این اے3 سوات سے تحریک انصاف کے سلیم الرحمان کے ہاتھوں شکست کھا گئے ہیں ، قومی اسمبلی کے حلقہ این اے24 چارسدہ پر اے این پی کے قائد اسفندیارولی خان اور تحریک انصاف کے سابق صوبائی صدر فضل محمد خان کے درمیان مقابلہ ہوا جس میں فضل محمد خان کامیاب ہوئے، قومی وطن پارٹی کے چیئرمین آفتاب احمد خان شیرپاؤ قومی اسمبلی کے حلقہ این اے23 چارسدہ سے الیکشن لڑا مگر کامیاب نہ ہوسکے، مولانا فضل الرحمان ڈیرہ اسماعیل خان سے قومی اسمبلی کی نشست پر تحریک انصاف کے یعقوب شیخ سے الیکشن ہار گئے ، جماعت اسلامی کے امیر سراج الحق قومی اسمبلی کے حلقہ این اے7 پر تحریک انصاف کے امیدوار بشیر خان سے الیکشن نہ جیت سکے، قومی وطن پار ٹی کے صوبائی چیئرمین سکندر خان شیرپاؤ تحریک انصاف کے امیدوار خالد خان ، اے این پی کے مرکزی جنرل سیکرٹری میاں افتخار حسین تحریک انصاف کے امیدوار خلیق الزمان اور اے این پی کے مرکزی سینئر نائب صدر الحاج غلام احمد بلور تحریک انصاف کے امیدوار حاجی شوکت علی کے ہاتھوں شکست کھا گئے ۔

اس خبر پر اپنی رائے کا اظہار کریں

اپنا تبصرہ بھیجیں

This site uses Akismet to reduce spam. Learn how your comment data is processed.