16

’ایران کا یورینیم کی افزودگی کی صلاحیت کو بڑھانے کا فصیلہ‘

ایران کے سرکاری ذرائع ابلاغ کا کہنا ہے کہ یورینیم کی افزودگی کی صلاحیت بڑھانے کے بارے میں اقوام متحدہ کے جوہری ادارے آئی اے ای اے کو مطلع کر دیا گیا ہے۔

ایران کی جوہری توانائی کے ادارے کا کہنا ہے کہ اس بارے میں منگل کو ایک خط آئی اے ای اے کو دیا گیا ہے۔

ایران کے جوہری ادارے نے اعلان کیا ہے کہ وہ افزودگی کا سب سے اہم جز یورینیم ہیگزا فلورائڈ زیادہ بنائے گا۔

ایران کی جانب سے یہ اعلان ایک ایسے وقت پر سامنے آیا ہے جب امریکی صدر نے ایران اور چھ عالمی طاقتوں کے مابین طے پانے والے معاہدے سے نکلنے کا اعلان کیا تھا۔

اس سے کیا حاصل ہوگا؟
ایران کی جوہری توانائی کے ادارے کے سربراہ علی اکبر صالحی نے منگل کو صحافیوں کو بتایا کہ نئے آلات بنانے کے لیے تیاریاں جاری ہیں۔

انھوں نے کہا کہ ’اگر ہم معمول کے مطابق کام کرتے تو شاید چھ سے سات سال لگ جاتے لیکن اب یہ آئندہ ہفتوں یا مہینوں میں تیار ہو جائے گا۔‘

اس طرح سے ایران افزودگی کا سب سے اہم جز یورینیم ہیگزا فلورائڈ زیادہ بنا سکے گا۔

علی اکبر صالحی نے کہا ہے کہ یہ ایران کے سپریم لیڈر آیت اللہ خامنہ ای کہ حکم کے بعد کیا جا رہا ہے۔ آیت اللہ خامنہ ای نے متعلقہ حکام کو حکم دیا تھا کہ اگر جوہری معاہدہ مکمل طور پر ختم ہو گیا تو وہ افزودگی کے لیے اپنی تیاریاں تیز رکھیں۔

ایران کے سپریم لیڈر آیت اللہ خامنہ ای نے یورپی ممالک کو بھی خبردار کیا تھا کہ ایران امریکی پابندیوں کے ساتھ اپنے جوہری پروگرام کو محدود کرنے کے لیے کوئی دباؤ برداشت نہیں کرے گا۔

ایران کے سپریم رہنما نے کہا تھا کہ ’بعض یورپین دونوں چیزوں پر بات کر رہے ہیں کہ ایران پابندیوں کو بھی برداشت کرے اور دفاعی میزائل پروگرام کو بھی محدود کرے جو کہ ملک کے مستقبل کے لیے ضروری ہے۔ میں یورپی حکومتوں کو بتا رہا ہوں کہ یہ وہ خواب ہے جو کبھی پورا نہیں ہو گا۔‘

یاد رہے کہ صدر ٹرمپ کی جانب سے معاہدہ توڑنے کے بعد یورپی ممالک نے بہت کوشش کی کہ اس معاہدے کو بچایا جا سکے۔

امریکی حکام کا کہنا ہے کہ ایران کے ساتھ ‘نئے معاہدے’ کے لیے ایرانی افواج کے شام اور یمن سے انخلا سمیت 12 شرائط پوری کرنی ہوں گی۔
امریکی حکام کا کہنا تھا کہ ایران کے ساتھ ‘نئے معاہدے’ کے لیے ایران کو 12 شرائط پوری کرنی ہوں گی۔ ان شرائط میں شام سے ایرانی فورسز کا انخلا اور یمن میں حوثی پاغیوں کی حمایت ختم کرنا شامل ہے۔

اس خبر پر اپنی رائے کا اظہار کریں

اپنا تبصرہ بھیجیں

This site uses Akismet to reduce spam. Learn how your comment data is processed.